لاگ ان
Login
 ای میل
پاس ورڈ
 
Disclamier


کیا خود کو سدھارنے کا وقت نہیں آگیا؟ Share
……سید شہزاد عالم……
یہ کہنا اپنی جگہ بالکل درست ہے کہ ابھی تک قوم آزادی کے حقیقی ثمرات سے محروم ہے لیکن یہ بھی سمجھنا غلط ہو گا کہ ہمارے پاس کچھ نہیں ہے یا کچھ نہیں بچا۔ قوموں کی زندگی میں اچھے برے دن آتے رہتے ہیں۔ کبھی اندرونی مسائل شدت اختیار کرتے ہیں تو کبھی بیرونی خطرات سر پر منڈلاتے ہیں۔ لیکن با ہمت قومیں کامیابی کے ساتھ وقت کی آزمائش پر پوری اترتی ہیں اور زمانے سے اپنا وجودمنواتی ہیں۔ زیادہ دور جانے کی ضرورت نہیں ہم اپنے پڑوسی اور دنیا کی عظیم قوم چین سے بہت کچھ سیکھ سکتے ہیں۔ کلینڈر میں تو چین ہم سے ایک سال بعدآزاد ہوا لیکن آج وہ ترقی کی دوڑ میں ہم تو کیا دنیا کی کئی ترقی یافتہ اقوام سے آگے نکل کرایک عظیم مثال بن کر سامنے آیا ہے۔ معیشت، دفاع، ٹیکنالوجی، عالمی سیاست اور ڈسپلن میں چین اس وقت دیگر اقوام میں نمایاں ہے۔ چین کی اس ہوش ربا ترقی کا راز ان کی قوم کے ڈسپلن میں چھپا ہوا ہے۔ کہنے والے ان کے طرز حکومت پر انگلیاں اٹھاتے ہیں اور انسانی حقوق کی پامالی کے الزامات بھی لگاتے ہیں لیکن ان سب الزامات سے بے نیاز ہو کر چینی قوم کسی بھی احساس کمتری کا شکار ہوئے بغیر اپنی منزل کی طرف گامزن ہے۔ ان کی قیادت نے قوم کو ڈسپلن کا عادی بنا دیا اوراس کی وسعت نظری نے قوم کو ان کی منزل کی نشاندہی کی اور پوری چینی قوم یکجا ہو کر اس منزل کی طرف رواں دواں ہے باوجود اس کے کہ چین کے دشمن پوری کوشش میں ہیں کہ چین کے اقتصادی جن کو قابو میں لایا جائے۔ چین کے لئے ہر قدم پر مشکلات پیدا کی جائیں لیکن چینی قوم ان تمام مشکلات سے دل جمعی اور ہوشیاری کے ساتھ نبرد آزما ہے۔ آج عالمی سیاست، معیشت، اور اسٹراٹیجک معاملات میں چین کے کردار کو کوئی ملک یا بلاک نظر انداز نہیں کر سکتا۔ میں یہ کہنے سے ہرگز نہیں رک سکتا کہ عالمی معاملات میں چین کی دانشمندی وسعت نظری اور ثابت قدمی نے آج دنیا کو تیسری جنگ عظیم سے بچا یا ہوا ہے۔
پاکستان کی خوش قسمتی کہ یہی چین اس کا آزمودہ، سچا اور عظیم دوست ہے جس نے ہر گام اور ہر مشکل میں پاکستان کی مدد کی اور اسے عالمی سازشوں سے محفوظ رکھنے کی ہر ممکن کوشش کی۔ آج پاکستان اپنی تاریخ کے نازک ترین دور میں داخل ہو گیا ہے۔ ہم آج اندرونی انتشار کا شکار ہیں، معیشت بھی ڈانوا ڈول ہے اور تعلیم، صحت اور دیگر بنیادی سہولیات بھی تباہی کے دہانے پر ہیں۔ دفاعی ادارے بھی بیرونی سازشوں کی زد میں ہیں اور ملک کی سالمیت داؤ پر لگی ہوئی ہے۔ اس بگاڑ میں بڑا حصہ خود ہمارا ااپنا ڈالا ہوا ہے لیکن یہی وقت قوم کے لئے دراصل آزمائش کا وقت ہوتا ہے۔ ایک قوم بننے کی ضرورت آج سے پہلے کبھی اتنی زیادہ نہیں تھی۔ یہی وہ وقت ہے جب ہمیں اپنی ترجیحات کا تعین کرنا ہو گا۔مجھ ناچیز کی رائے تو یہ ہے کہ اب شروعات کرنی ہے تواپنے اندر سے ہر طرح کے تعصبات کو خدا حافظ کہہ دیں اور ایک قوم کے احساس کو اجاگر کریں، تعلیم کو اپنا اوڑھنا بچھونا بنالیں، کام کرنے کی عادت کواپنا لیں ، ایمانداری اور خوف خدا کو سامنے رکھیں تو سماجی سطح پر اتنے مضبوط ہو جائیں گے کہ پھر ملک کے اندر سیاسی سطح پر تبدیلی لانا مشکل نہیں ہوگی۔ سیاسی قیادت کو اپنا قبلہ درست کرنا پڑ جائے گا ۔ جب لوگ انفرادی سطح پر برائی کو برائی سمجھیں گے اور اپنا کردار درست کرلیں گے تو سرکاری اہلکاروں کو بھی اپنے اندر سدھار لانا پڑ جائے گا۔ جب قوم کی سطح پر مضبوط ہو جائیں گے تو کسی کو ہمارے تشخص کے اندر نقب لگانے کا موقع اور راستہ نہیں ملے گا۔ کہنے اور پڑھنے کو تو یہ باتیں بڑی عجیب اور کتابی لگتی ہیں لیکن سدھرنے کا راستہ شاید اسی میں سے نکلے۔
shahzad.janggroup@gmail.com  
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 28 ) احباب کو بھیجئے
 
  ShareThis

   تبصرہ کریں  
  آپ کا نام
  ای میل ایڈریس
شھر کا نام
ملک
  تبصرہ
کوڈ ڈالیں 
  Urdu Keyboard


ادریس زعفران، گجر خان…صرف ایک ہی حل ہے کہ انتخابی نظام میں تبدیلی لائی جائے۔
 
idrees zafran Posted on: Tuesday, September 04, 2012


Adnan Umar, Sahiwal.........pakistan ko is waqat sirf of sirf Allha ki rehmat ki zarort ha jo duaon se li ja sakti ha. hm hukmrano ko koe gila nai dey sakty q k Allha khud farmaty han k jesi qoom ho gi me wesa he hukmrn muslat kro ga. hamey Allha sey magfrat krni chey.
 
adnan umar Posted on: Monday, September 03, 2012


مرزا بشارت حسین، جرمنی…خوف خدا کریں۔ نہ غذا خالص نہ دوا خالص کچھ بھی نہ اب رہا خالص یہ بچے کیا بنیں گے ایوبی دودھ بھی جنہیں نہ ملا خالص یہ پیار وہ وفا یہ دوست وہ رشتہ کچھ بھی تو نہیں بچا خالص بشارت آوٴ سب استغفار کریں خدا کرے کہ ہو ہماری دعا خا لص
 
Mirza Basharat Hussain Posted on: Tuesday, August 28, 2012


Abdul Aziz, Pakistan........Humey pakistan se piyar krna chahiye aur INSHA ALLAH Pakistan main inqlab zroor aega.
 
Abdul Aziz Posted on: Wednesday, August 22, 2012


MUHAMMAD , IRAN..........BAT BIKUL DURUST HAI.
 
MUHAMMAD Posted on: Wednesday, August 22, 2012


Saeed Khan Abbasi , Karachi.........Shehzad bhai, Qoumi halat ko iss khubsurat naseehyat ki surat me samne lany par apko daad e thseen deta hun, yeh khaksaar bhot jald ek aam our mamooli hesyat honey ke bawjood ek Pakistani ki hesyat se apna kirdr qoumi satah par adda karne ja rha hay jiss me ap ke mazkura blog ke mundirjat jesa muwad ki mujh bhot zrurat hay, bray karm rabta rkhy ga takay apki soch ki roshni se faiz hasil karta rahun. Duaa Gou,
 
Saeed Khan Abbasi Posted on: Tuesday, August 21, 2012


Shafaqat Khan , UAE.........ap ka blog sabaq amoz he hamry mulk ko aik asi leadership ke zarorat he jo soobaiyat ka sabaq na de balkeh Paksitan ka sabaq de.
 
shafaqat khan Posted on: Tuesday, August 21, 2012


Sami Ullah Asi, Shakargarh.........Beshak
 
sami ullah asi Posted on: Sunday, August 19, 2012


Rana Afzal, Mahmood Kot..........Bhai eid awaam kasy guzaray ge or loadsheding ky bary main kuch btaien
 
Rana.Afzal Posted on: Saturday, August 18, 2012


Imran, Khairpur..........Acha blog hai main mukaml tor par is say mutafiq hun ab waqt a gaya hai ky ham sab aik dusry par zabani hamly karny our tankeed karny ki bajay aik ho team work aur aik nation ki tarha kaam karein to puri dunia ko shikast fash day skaty hain.
 
imran Posted on: Saturday, August 18, 2012


Hamid, Sialkot.........ab badlnay ka waqt a gia h uth kharay ho janachahiye aur sb ko pta chal jay k muslim hain hm.
 
hamid Posted on: Saturday, August 18, 2012


QIASER, UK.........PECHLEY DINON KISI KEY SATH PAKSITAN KEY KHUD SAKHTAH BUHRANON KE BAREY MEIN BAAT HO RAHI THI MOSOUF KA KEHNA THA KE HUMARA SUB SE BARA ALAMIA YEH HAI KE HUM CORRUPT AUR BAD-DYANAT LOG HAIN .MAIN NEY KAHA YEH REVERSIBLE LOSE HAIN.
 
qaiser Posted on: Thursday, August 16, 2012


Uzma, Karachi...........ye hi to burai he hamari qooam me k ham khud theek nehi...hain, sirf 2 cup chai pi k lambey lambey tabsare to kr skte hen.dosron pe criticize to kr skte hen.mgr jo hme krna he hm wo nehi krte.ham khud ko dekhen to ham khud kon sa apne mulk k sath theek he...kunda dalte hen..bijli k bill to jma k na krana ham apna haq smjte hen..n phr b jab dekho criticizing ...hme khud ko bdlna he..ham abhi b bht kuch kr skte hen.hme apni soch ko bdlna he..ab hm ne ye soch liya he imran khan aenge wo mulk ko bdal denge...jb tk hm nehi bdlenge mulk ki halat theek nehi honi..ye hukmaran sirf apne jeb bhrne ate hen..or qoom k sath tb tk wafadar hen jb tk unhe vote na mil jaen..to dosron pe inhisar krna chor k hme bdlna he..
 
UZMA Posted on: Wednesday, August 15, 2012


SYED SHAKEEL AKHTER , USA........KHOOBSURAT UNWAN HAI SAWAL YE PAIDA HOTA HAI KAY KHUD KO KIS TARAH SUDHAREIN, JAB MAHOL HI AISA MILA HAI, KEH INSAA KAY TAQAAZE HI POORAY NA HO RAHE HON, JIS MAHOL MEIN GHAREEB KO INSAF NA MILAY, JAHAN LOG BHOOK SAY TANG AAKAR APNE LAKHTE JIGAR KO YA TO CHAND PAISY KILEYE FAROKHT KARDEIN YA PHIR SAREY KUNBEY KE SAATH IJTIMAI KHUDKUSHI KARLEIN AUR INSAAF NA MILAY TO MERE BHAI AAP KAISEY TAWAQO KARTE HAIN KAY HAM SUDHAR JAYEN.
 
SYED SHAKEEL AKHTER Posted on: Wednesday, August 15, 2012


طالب حسین، گوجرانوالہ…جب جذبات اور خود غرضی افکار پر غالب آجاتے ہیں تو مشکلات پیدا ہوتی ہیں اور ناکامی مقدر بن جاتی ہے.ان سے اجتناب ضروری ہے .
 
طالب حسیں Posted on: Wednesday, August 15, 2012
Prev | 1 | 2 | Next
Page 1 of 2


ورلڈ پولیو ڈے
اردوزبان کانفاذ:اہم قومی،آئینی ضرورت
’گو بابا گو‘ سے ’گو وٹو گو‘ تک!!
اب مستحکم فیصلے ہی پاکستانی کرکٹ کو بچاسکتے ہیں
ہاتھ دھونے کا عالمی دن
 
قربانی سے پہلے قربانی۔۔۔۔فلم فلاپ!!!
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 33 )
ملالہ کیلئے نوبل انعام اور سوشل میڈیا
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 11 )
بے ترتیبی ہی اب ترتیب ہوئی جاتی ہے
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 7 )
صوبائی اسمبلیوں کی پہلے سال کی کارکردگی
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 5 )
اردوزبان کانفاذ:اہم قومی،آئینی ضرورت
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 5 )
 
 
 
 
Disclamier
 
 
Disclamier
Jang Group of Newspapers
All rights reserved. Reproduction or misrepresentation of material available on this
web site in any form is infringement of copyright and is strictly prohibited
Privacy Policy