لاگ ان
Login
 ای میل
پاس ورڈ
 
Disclamier


لندن اولمپکس، چین اور امریکا میں میڈلز کی جنگ!! Share
……سید شہزاد عالم……
لندن میں جاری اولمپکس مقابلوں میں دن گزرنے کے ساتھ ساتھ تیزی آتی جا رہی ہے۔ اب تک چینی اور امریکی ایتھلیٹس کے درمیان تمغوں کی اصل دوڑ جاری ہے، جس میں اب تک چین کو سبقت حاصل ہے۔ اس دوڑ میں اب تک میزبان برطانیہ کا دور دور تک نام نظر نہیں آ رہا ہے۔ امریکی پیراک مائیکل فیلپس تاریخ کے کامیاب ترین اولمپین بن گئے۔انہوں نے چار ضرب دو سو میٹر ریلے میں طلائی تمغہ جیت کر رشین جمناسٹ کا 18 میڈلز جیتنے کا ریکارڈتوڑ دیا۔امریکی پیراک نے اب تک مجموعی طور پر 19 میڈلز جیتے ہیں۔ جہاں کھیلوں کے نئے نئے ریکارڈز بن رہے ہیں وہیں کرپشن بھی کسی سے پیچھے نظر نہیں آرہی ہے۔ ٹکٹوں کی بلیک مارکیٹنگ کے واقعات بھی کھلے عام دیکھنے میں آ رہے ہیں۔ اولمپک حکام اسٹیڈیم کی خالی نشستوں سے پریشان نظر آ رہے ہیں کہ شائقین آخر کہاں چلے گئے؟ میچ فکسنگ اب کرکٹ تک ہی محدود نہیں رہی بلکہ اب اس لعنت نے دیگر کھیلوں کا بھی رخ کرلیا ہے، لندن اولمپکس جیسا انٹرنیشنل میگا ایونٹ بھی اس سے محفوظ نہ رہا، دلچسپ بات یہ ہے کہ اس بار میچ فکسنگ کسی مرد کھلاڑی نے نہیں بلکہ خواتین کھلاڑیوں نے کی ہے۔ بیڈمنٹن کی عالمی فیڈریشن نے اولمپک مقابلوں میں شامل آٹھ کھلاڑیوں پر الزام لگایا ہے کہ انہوں نے جان بوجھ کر اپنے میچز ہارے ہیں۔ عالمی بیڈمنٹن فیڈریشن نے لند ن اولمپکس کے بیڈمنٹن کے ویمنز ڈبلز ایونٹ میں تین ممالک کے آٹھ کھلاڑیوں پر میچ فکسنگ کا الزام لگایا ہے،ان کھلاڑیوں کا تعلق چین ، جنوبی کوریا اور انڈونیشیاء سے ہے، بیڈمنٹن کی عالمی فیڈریشن کے مطابق ومبلے ارینا میں تینوں ممالک کے کھلاڑی جان بوجھ کر پوائنٹس نہیں بنارہے تھے تاکہ اگلے میچز میں انہیں آسان حریف سے سامنا ہو،ان الزامات کے بعد چین نے تحقیقات شروع کردی ہیں، جبکہ جنوبی کوریا کے ہیڈ کوچ سنگ ہان کوک نے تسلیم کیا ہے کہ ان کے کھلاڑیوں نے جان بوجھ کر میچ ہارا ہے کیونکہ اس سے پہلے چین کے کھلاڑیوں نے ایسا کیا۔ عذر گناہ بدتر از گناہ، اب وجہ کچھ بھی بیان کی جائے، اولمپک حکام کو ان باتوں کا سختی سے نوٹس لینا چاہئے تاکہ کھیلوں اور ان کے نتائج پرشائقین کا اعتبار اور اعتماد قائم رہے۔ کھیلوں میں کرپشن اور دھوکہ دہی کو کسی صورت بھی برداشت نہیں کیا جانا چاہئے۔
اس بار کیونکہ اولمپکس گیمز لندن میں ہو رہے ہیں تو کرکٹ کے شائقین ان مقابلوں میں کرکٹ کی عدم شمولیت کو شدت سے محسوس کر رہے ہیں۔ ٹی ٹوئنٹی کرکٹ کی مقبولیت کے بعد کرکٹ کے شائقین اس طرز کی کرکٹ کو اولمپکس مقابلوں میں شامل دیکھنا چاہتے ہیں۔ اولمپکس گیمز میں کرکٹ کی شمولیت کے لئے آئی سی سی کو بھرپور کوششیں کرنی چاہئے۔
اولمپک مقابلوں میں پاکستان کو سب سے زیادہ امیدیں اپنی ہاکی ٹیم سے ہوتی ہیں۔ پاکستان نے آخری بار لاس اینجلس اولمپکس میں طلائی تمغہ جیتا تھا۔ ہاکی میں زوال کے بعد سے پاکستانی ٹیم کی عالمی مقابلوں میں کوئی نمایاں کارکردگی نہیں رہی لیکن پھر بھی ہم اپنی ہاکی ٹیم کواولمپکس میں کم از کم وکٹری اسٹینڈ پر دیکھنا چاہتے ہیں۔ اولمپکس میں طلائی تمغہ پاکستان میں ہاکی کو ایک بار پھر زندہ کر دے گا اور کھلاڑیوں میں ایک نئی روح پھونک دے گا۔ تاہم اس کے لئے ہماری ہاکی ٹیم کو سر دھڑ کی بازی لگانا ہو گی۔
shahzad.janggroup@gmail.com  
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 25 ) احباب کو بھیجئے
 
  ShareThis

   تبصرہ کریں  
  آپ کا نام
  ای میل ایڈریس
شھر کا نام
ملک
  تبصرہ
کوڈ ڈالیں 
  Urdu Keyboard


ندیم، اٹلی…ہمیں دعا کرنی چاہئے کہ پاکستان گولڈ میڈل جیت کر وطن لوٹے۔
 
Muhammad Nadeem Posted on: Tuesday, July 31, 2012


خالد انکل، امریکا… المپکس کھیل لندن میں ایک رنگا رنگ افتتاحی تقریب سے شروع ہوئے ،جس میں برطانیہ نے اپنی صنعتی ترقی کی ایک اچھی تصویر پیش کی۔کھیلوں کے شروع ہوتے ہی چین کا دستہ ان پر چھا گیا اور اب تک سب سے زیادہ سونے کے میڈلز لینے والا ملک ہے، پاکستانی ہاکی ٹیم جو کافی عرصے سے زوال پذیر ہے اگرچہ اسپین کے خلاف کافی اچھا کھیلی مگر اس کے اگلے میچ کافی سخت ہیں، اگر وکٹری اسٹینڈ پر پاکستانی ہاکی ٹیم نظر آتی تو یہ ایک معجزہ ہوگا، افتتاحی تقریب میں پاکستان سے کسی نمایاں شخصیت کی عدم موجودگی سے ملک ایک مالی خسارے سے بچ گیا۔
 
خالد انکل Posted on: Monday, July 30, 2012


Waqar, Lahore............jis mulk main taraki hoti hai wahan k khail bhi taraki kertay hain. pakistan ki taraki ap k samnay hai or khailon main bhi pakistan taizi se peechay ki janab jaa raha hai. Allah hamary pakistan ki hifazat farmaey, ameen
 
waqar Posted on: Monday, July 30, 2012


Javed Iqbal Malik, Chakwal...........pakistan ko olympic man bharpur shirkat kerni chaiy the, aur pakistan ko aik nam paida kerna chaiy tha, lakin asa nai howa, pakistan kay player iss event ko jeet ki nigah say nai latay, phelay hi keh datay han keh wo jeet nai sakan gay.
 
javed iqbal malik Posted on: Monday, July 30, 2012


Faqir Hussain, Samundri.............Allah karay pakistan hocky team medal jeet jaaey, Ameen.
 
faqir hussain Posted on: Monday, July 30, 2012


Reenu Anjum, Islamabad...........Hum sub ko achi umeed rakhni chahiye. per serf umeedon se kuch nahi hota..jab pora mulk hi inhatat ka shekar ho wahan hum apne playerz se kese gold medals ki umeed kar saktey hain..jang or khel ko jazbon se jeeta jata hai ..ab hum me wo jazba hi nahi raha, humara mehwar sirf or sirf pesa ban gaya hai. izzat ka ahsas hi khatam ho gaya ..pehley players k liyeh yeh ehsas hi proud ka bais hota tha k dosrey mulk me humara Parcham sir buland ho ga .humarey mulk ka tarana sunaai dega dosrey mulk me..is ehsas se hi dil khushi se bhar jata tha per ab sirf yeh fekar hoti hai k pesa kitna or kese miley ga..pese k liyeh apne mulk ki izzat ka sauda bhi aram se kar leya jata hai.jeeti hoi bazi ko haar atey hain humarey sher dil playerz ...in se hum kese umeed karain k yeh humarey leyeh gold medal le kar aaen gay. ALLAH hum sub per reham karey..or khas kar humarey peyarey mulk per...
 
reenu anjum Posted on: Monday, July 30, 2012


Kamran, Karachi..........Hamaraa game Loot Mar hay wo es events mian shamel nahee hay esleyaa ab Gold Madel nahee mil sakta.
 
kamran Posted on: Sunday, July 29, 2012


آزاد، چمن…کاش پاکستان ٹیم گولڈ میڈل جیت لے۔
 
azad Posted on: Sunday, July 29, 2012


Waqas Hashmi, London............hamarey paas corruption ka gold medal hai....kissi aur medal ki kaya zaroorat hai?
 
Waqas Hashmi Posted on: Sunday, July 29, 2012


جنید خان، کراچی…امید کرتے ہیں کہ پاکستان ہاکی ٹیم اولمپکس میں اچھی کارکردگی دکھائے گی اور قوم کو مایوس نہیں کرے گی۔
 
Junaid Khan Posted on: Sunday, July 29, 2012
Prev | 1 | 2 | Next
Page 2 of 2


لفظوں کے انتخاب نے رسوا کیا تجھے
میرا کی ہی سن لیں!
مذاکرات کاموقع ضائع نہ کریں!
سول نافرمانی اور سوشل میڈیا
سول نافرمانی تحریک!!!
 
واقعی کچھ ہونے والا ہے۔۔۔۔؟
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 35 )
شاباش! سعیدہ وارثی
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 31 )
سول نافرمانی تحریک!!!
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 27 )
وزیراعظم عمران خان یا طاہرالقادری؟
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 26 )
لفظوں کے انتخاب نے رسوا کیا تجھے
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 20 )
 
 
 
 
Disclamier
 
 
Disclamier
Jang Group of Newspapers
All rights reserved. Reproduction or misrepresentation of material available on this
web site in any form is infringement of copyright and is strictly prohibited
Privacy Policy