لاگ ان
Login
 ای میل
پاس ورڈ
 
Disclamier


Disclamier
کم سن کلاس فیلوزکی خودکشی
......سید شہزاد عالم......
کراچی میں اسکول کے کلاس فیلوز کی عشق میں ناکامی کے بعد خودکشی اور اس کے طریقہء کار نے عوام میں سنسنی اور تشویش کی لہر پیدا کر دی ہے۔ ان بچوں کے والدین ان کی سرگرمیوں سے واقف تھے اور انہوں نے ان کی شادی کے امکانات کو شاید اس وجہ سے مسترد کر دیئے کہ ان کا سماجی پس منظر الگ تھا۔اس سانحہ کی تفصیلات کو تو ایک طرف رکھئے ان کی خود کشی کا طریقہء کار ایسا ہے جس سے تشویش اورفکر کے کئی پہلو سامنے آئے ہیں۔مثلاً اگلے دن اپنی موت واقع ہونے کا اعلان پیشگی ایک سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر پوسٹ کرنا، اپنی خود کشی کے بارے میں خطوط لکھ چھوڑنا، خود کشی کے لئے آتشیں اسلحے کا استعمال اور اسے اپنے اوپر استعمال کی ہمت دکھانااور دیگر باتیں جو ابھی زیر تفتیش ہیں، یہ ظاہر کرتی ہیں کہ ان کا یہ فعل اضطراری نہیں تھا بلکہ اس کی منصوبہ بندی وہ کئی دنوں سے کر رہے تھے لیکن اس کی بھنک نہ ان کے والدین کو ہوئی، نہ ان کے کلاس فیلوز کو ہوئی اور نہ ان کے اساتذہ کو ہوئی۔ دور حاضر میں دستیاب وسائل کے باعث کسی کم سن لڑکے اور لڑکی کا عشق میں مبتلا ہونا اتنے اچھنبے کی بات نہیں جتنا ان کے ناکام عشق کے بعد ان کے گھر والوں کا ان کی طرف سے غافل ہوجانا جبکہ وہ ایک ہی جگہ زیر تعلیم بھی ہوںزیادہ فکر انگیز بات ہے، کیا والدین اس قدر مصروف ہو گئے ہیں کہ ان توجہ بچوں پر با لکل نہیں رہی ، کیا سب نے اپنی اپنی مصروفیت کی دیواریں اتنی بلند کر لی ہیں کہ کسی کو کسی کی کوئی خبر نہ رہی شاید اولاد کی بھی؟ اگر گھر میں آتشیں اسلحہ تھا تو بچوں کی دسترس میں کیسے آیا؟ اور اگر کسی طرح آ گیا تو اس کا علم کیوں نہ ہوا؟ اتنی کم سنی میں اسے اس کا استعمال آتا تھا تو اس کی ذمہ داری والدین پر ہی آتی ہے۔ یہ بھی معلوم ہوا ہے اس اقدام کا منصوبہ انہوں نے بھارتی فلم ’’ عشق زادے‘‘ کی کہانی سے متاثر ہو کر بنایا ۔ اس جیسے جیسے زیر تفتیش حادثے کے مختلف پہلو سامنے آ رہے ہیں، یہ بات عیاں ہوتی جا رہی ہے کہ بچوں کی نگہداشت میں کوتاہی کبھی کبھی بہت بڑے امتحان میں ڈال دیتی ہے اورکبھی تو پچھتانے اور تلافی کا موقع بھی نہیں ملتا جیسا اس حادثے کے متاثرہ والدین کے ساتھ ہوا۔ اللہ سب کو اس طرح کی آزمائشوں سے محفوظ رکھے ۔آمین

[email protected]  
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 8 ) احباب کو بھیجئے
جماعت اسلامی اوریوم اردو
گالی اوردھمکی کا کلچرسیاست نہیں
سحرافشاں شہید تمغہ شجاعت
کیا نفاذ اردو کیلئے تیاریاں مکمل ہیں
ارکان اسمبلی غیر حاضر جناب‎
 
چنگ چی رکشوں کی بندش اوربےروزگاری
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 30 )
ہری پوروالوں نے بھی ہری جھنڈی دکھادی
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 19 )
قصورکے بچوں کو انصاف دو۔۔
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 17 )
قصور اسکینڈل: معاملہ دبنا نہیں چاہئے!
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 16 )
سحرافشاں شہید تمغہ شجاعت
تبصرہ کریں  تبصرے  ( 16 )
 
 
 
 
Disclamier
 
 
Disclamier
  جماعت اسلامی اوریوم اردو   
.....سید عارف مصطفیٰ.....
خبر ملی ہے کہ جماعت اسلامی یوم اردو منا رہی ہے ۔ کیوں منا رہی ہے؟ شاید اسلئے کہ اسے کچھ نہ کچھ مناتے رہنے کی عادت سی پڑگئی ہے ،، یا پھر اسلئے کہ ان دنوں سپریم کورٹ میں نفاذ اردو کا مقدمہ عوامی سطح پہ ایک
مکمل بلاگ  
تبصرہ کریں  تبصرے  (9)

 

  گالی اوردھمکی کا کلچرسیاست نہیں   
.....سید عارف مصطفیٰ.....
میڈیا سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق پی ٹی آئی کے ایک سینئر اور نیک نام رہنما جسٹس (ریٹائرڈ ) وجیہ الدین احمد کو مبینہ طور پہ پی ٹی آئی کے ایک گروپ کی جانب سے ایک دھمکی آمیز خط موصول ہوا ہے، جس میں انہیں پارٹی چیئرمین
مکمل بلاگ  
تبصرہ کریں  تبصرے  (4)

 

  سحرافشاں شہید تمغہ شجاعت   
.....جویریہ صدیق.....
16 دسمبر 2014 کو پشاور آرمی پبلک اسکول پشاور میں اپنے شاگردوں کے ساتھ اردو کی استاد سحر افشاں نے بھی جام شہادت نوش کیا،سحر افشاں سانحہ پشاور کے ان پہلے شہیدوں میں تھیں جنہیں دہشتگردوں نے نشانہ بنایا،ان کے غازی شاگرد کہتے ہیں ہماری بہادر میڈیم نے دہشتگردوں
مکمل بلاگ  
تبصرہ کریں  تبصرے  (16)

 

Jang Group of Newspapers
All rights reserved. Reproduction or misrepresentation of material available on this
web site in any form is infringement of copyright and is strictly prohibited
Privacy Policy